’’ ہاں یہ گناہ ہے جو ہم کر بیٹھے ہیں۔۔۔‘‘ لیگی رہنمامیاں جاوید لطیف نے لائیو پروگرام کے دوران اعتراف کر لیا، اپوزیشن کو سرپرائز دے ڈالا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) مسلم لیگ ن کے رہنما میاں جاوید لطیف نے کہاہے کہ نواز شریف اور بے نظیر پر کرپشن اور غداری کے الزامات لگتے رہے ، ہم پیپلز پارٹی کے خلاف اور پیپلز پارٹی ہمارے خلاف استعمال ہوئی ، یہ گنا ہ تھا ۔تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی

چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے میاں جاویدلطیف نے کہا کہ تحریک انصاف کادور بدترین دور ہے ، ایسا بدترین انتقام تو ضیا ءاور مشرف کے ادوار میں بھی نہیں لیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان اداروں سے کہتے ہیں کہ میں اس کو صدارتی ایوارڈ دوں گا جو اپوزیشن کے کسی بندے کو اندر کرنے میں مدددیگا ۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان جو اسلامی امہ کے ہیرو بننے جارہے تھے تو ان کو مکہ اعلانیہ میں شامل کیوں نہ کیا گیا ؟ انہوں نے کہاکہ نواز شریف اور بے نظیر پر کرپشن اور غداری کے الزامات لگتے رہے ، ہم پیپلز پارٹی کے خلاف اور پیپلز پارٹی ہمارے خلاف استعمال ہوئی ، یہ گنا ہ تھا ۔جاوید لطیف کا کہنا تھا کہ ہم اب آنیوالے نسلوں کیلئے ایک ایساگنا ہ چھوڑ کرنہیں جانا چاہتے ، ہم آنیوالے نسلوں کیلئے ایک ایسا پاکستان چھوڑ کرجانا چاہتے ہیں جس میں کوئی تھرڈ ایمپائر کی طرف نہ دیکھے ۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان جس کی گاڑی چلا کر جارہے تھے وہ مودی کو بڑا ایوارڈ دینے جارہاہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ ہم پاکستان کیلئے لٹک جائیں گے اور پھانسی لیں گے لیکن تحریک انصاف کی حکومت کوقبول نہیں کریں گے ۔ خیال رہے کہ یہ پاکستانی سیاسی جماعتوں کا وطیرہ بن چکا ہے، جب اقتدار میں آتے ہیں تو ایک دوسرے کی سخت مخالفت پر اتر آتے ہیں لیکن جیسے ہی اپوزیشن میں آتے ہیں تو حکومت کو ٹف ٹائم دینے کے لیے ایک ساتھ ہو کرماضی بلا کر حکومت کے خلاف محاذ کھول لیتے ہیں۔