بریکنگ نیوز: وہی ہوا جسکا ڈر تھا ، فرانس میں مبینہ دہشت گردی کی خوفناک واردات ۔۔۔۔۔ قیمتی جانی نقصان، پوری دنیا میں تشویش کی لہر دوڑ گئی

پیرس (ویب ڈیسک) فرانس کے شہر نیس میں چرچ کے اندر خاتون کا سر تن سے علیحدہ کر دیا گیا ، اس نائف اٹیک میں مزید 2 افراد بھی جان سے گئے جبکہ متعدد افراد گھائل بھی ہو ئے، ملزم تیونس کے شہری کو گرفتار کرلیاگیا، پاکستان ، ترکی، سعودی عرب سمیت کئی ممالک نے اس واقعہ

کی مذمت کی ہے ، ادھر جدہ میں بھی فرانسیسی قونصل خانے کے گارڈ پر اٹیک کیاگیا۔غیر ملکی خبر ایجنسی کے فرانس کے شہر نیس کے میئر نے سوشل میڈیا پر اپنے بیان میں بتایا کہ چرچ کے اندراور باہر نائف اٹیک ہوا جس میں ایک خاتون کا سر تن سے علیحدہ ہو گیا جبکہ 2دیگر افراد جان سے گئے گئے اور متعدد گھائل ہو گئے پولیس نے ملزم کو زخمی کرکے گرفتار کر لیا ۔ جو اسپتال میں دوران علاج ’’اللہ اکبر ‘‘ کے نعرے لگاتا رہا۔پولیس نےو اقعہ کو ٹیررازم قرار دیدیا جبکہ فرانسیسی حکام نے ملک میں الرٹ لیول بڑھا دیا ہے اور گرجا گھروں کی نگرانی کیلئے 3سے7ہزار فوجی دستے تعینات کرنے کااعلان کیاہےیورپی رہنمائوں نے بھی فرانس کیساتھ اظہار یکجہتی کیا اور ان لوگوں سے نمٹنے کا عہدکیاہے جو نفرت پیدا اور پھیلانا چاہتے ہیں۔