رام مندر سے جڑا ہر شخص کورونا وائرس کا شکار ۔۔۔۔ آج ہونیوالے افتتاح کے حوالے سے حیران کن انکشاف

اسلام آباد(ویب ڈیسک)بھارت میں بابری مسجد کی جگہ رام مندرکا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب خدشات اور وسوسوں کا شکاردکھائی دے رہی ہے، رام مندر کی مہورت کے وقت پر تضاد سامنے آرہے ہیں۔کانگریس کے رکن پارلیمان دگ وجے سنگھ نے وزیر اعظم مودی کے نام ایک بیان میں کہا”مودی جی، آپ مزید کتنے

لوگوں کو سنگ بنیاد کے لیے ہسپتال بھیجنا چاہتے ہیں؟ وزیر داخلہ امیت شاہ بھی مدعو تھے لیکن وہ کورونا کا شکار ہوجانے کی وجہ سے ہسپتال میں زیر علاج ہیں۔ رام مندر کے سب سے بڑے پجاری مہنت ستیندر ناتھ کو قرنطینہ میں بھیج دیا گیا ہے۔ ان کے ایک شاگرد پردیپ داس کے علاوہ سکیورٹی پر تعینات سولہ اہلکار بھی پچھلے دنوں کورونا پازیٹیو پائے گئے تھے۔ اب ستیندر ناتھ کے دوسرے شاگرد سنتوش پوجا کرائیں گے۔دوسری جانب ایک اور خبر کے مطابق مقبوضہ جموں و کشمیر میں بھارت کی جانب سے جبری کرفیو کے ایک سال مکمل ہونے پر تحریک کشمیر برطانیہ کی جانب سے5سے15اگست تک بھارت کو عالمی برادری کے سامنے بے نقاب کرنے کے لیے ڈیجیٹل مہم کا آغاز یورپ کی سب سے بڑی لوکل اتھارٹی برمنگھم سٹی سینٹر کونسل ہال وکٹوریہ اسکوائر سے کردیا گیا۔ اس موقع پر صدر تحریک کشمیر برطانیہ کے فہیم کیانی، صدر تحریک کشمیر یورپ محمد غالب، صدر تحریک کشمیر مڈ لینڈ اعظم فاروق نے باقاعدہ ڈیجیٹل وین کا سٹی کونسل ہال کے سامنے لائونچنگ کرکے افتتاح کیا، اس موقع پر فہیم کیانی کا جنگ و جیو سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ یہ وین برمنگھم سے اپنے سفر کا آغاز کرکے برطانیہ کے مختلف شہروں کا دورہ کرے گی اور مختلف شاہرائوں پر اسکرینوں پر چلنے والے بینرز، سلوگن کے ذریعے بھارت کو بے نقاب کیا جائے گا۔ صدر ریاست سردار مسعود خان، صدر جماعت اسلامی عبدالرشید ترابی نے افتتاحی تقریب سے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ برطانیہ سے چلنے والی تحریک بالآخر کامیابی سے ہمکنار ہوتی ہے۔ ایسے ہی تحریک کشمیر بالآخر کامیاب ہوگی۔