مستقبل میں سپر پاور چائنہ۔۔۔ چینی صدر شی جن پنگ امریکا کوہلکی سی چُٹکی سے کیسے پریشان کردیتے ہیں ؟ بڑا دعویٰ سامنے آ گیا

لاہور(ویب ڈیسک) سینئر تجزیہ کار ڈاکٹر شاہد مسعود نے کہا ہے کہ چینی صدر نے امریکا کوہلکی سی چُٹکی سے پریشان کردیا ہے، شی جن پنگ ایک عام سویلین صدر نہیں،ان کو عام صدراور فوج کا روایتی سربراہ نہ سمجھا جائے، بلکہ وہ باقاعدہ عملی طور پرچینی فوج کے سپریم کمانڈر بھی ہیں۔ انہوں نے نجی ٹی وی

کے پروگرام میں تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ چینی صدرشی جن پنگ ایک عام سویلین صدر نہیں ہیں، جب ایک خاص وقت آتا ہے تو چینی صدر فوج کے سپریم کمانڈر ہوتے ہیں، یعنی چینی صدر ہمارے صدرمملکت کی طرح روایتی سربراہ نہیں بلکہ باقاعدہ پیپلز لبریشن آرمی کے سربراہ ہوتے ہیں۔شی جن پنگ باقاعدہ عملی طور پرچینی فوج کو ہیڈ کرتے ہیں۔چینی صدر ہلکی سے چُٹکی سے امریکا کو پریشانی میں مبتلا کردیا ہے۔انہوں نے کہا کہ اب مغرب اور چین کے بیچ میں انڈیا پھنس گیا ہے، نیویارک ٹائمز مسلسل مرچیں لگا رہا ہے، آج کے خبار میں ایک سرخی لگائی کہ کیا انڈیا چین کیخلاف مغرب کا ساتھ دے گا؟امریکا نے بھارت کو اتنی امداد دی، یعنی اب بھارت نہ ادھر رہا نہ ادھر کا رہا ہے۔دوسری جانب امریکہ نے چین اور بھارت کی فوج کے درمیان جھڑپ میں 20 فوجیوں کی ہلاکت پر بھارت سے اظہارِ ہمدردی کیا ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق جمعہ کو ایک ٹوئیٹ میں امریکہ کے وزیرِ خارجہ مائیک پومپیو نے کہا کہ چین کے ساتھ سرحد پر حالیہ محاذ آرائی میں انڈین فوج کے جانی نقصان پر بھارت سے تعزیت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہلاک ہونے والے بھارتی فوجیوں کے اہلِ خانہ، ان کے رشتہ داروں اور خاندانوں کو اپنے غم میں یاد رکھیں گے۔اسی طرح امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے خبردار کیا ہے کہ چین کے ساتھ اقتصادی روابط سمیت ہرطرح کے تعلقات مکمل طور پرختم کرنے کا آپشن موجود ہے۔ امریکی انتظامیہ کے پاس چین سے تمام روابط ختم کرنے کا اختیار ہے اور ہم یہ اختیار کسی بھی وقت استعمال کرسکتے ہیں۔