میرے ہوتے کوئی اور بادشاہ نہیں بن سکتا۔۔!! محمد بِن سلمان نے اپنے باپ ’شاہ سلمان‘ کے حکم ماننے سے انکار کر دیا، سعودی عرب کی اہم شخصیت کو ن ’ٹھکانے ‘ لگا دیا

لاہور (نیوز ڈیسک ) مبشر لقمان نے کہا ہے کہ سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کو خبر ملی تھی کہ شاہ سلمان نے احمد بن عبدالعزیز کو نیا بادشاہ مقرر کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ جس کے بعد سعودی کنگ شاہ سلمان نے اپنے سیکورٹی گارڈ جنرل عبدالعزیز کو حکم دیا تھا کہ

موجودہ شہزادے کو تاج سے الگ کر دیا جائے۔ جبکہ محمد بن سلمان کی کرائے کی فوج کو بھی ختم کرنے کا حکم دیا تھا۔مبشرلقمان کا کہنا ہے کہ ذرائع کے مطابق محمد بن سلمان نے جنرل عبدالعزیز پر الزام لگایا کہ وہ ان کے والد کو ان سے متعلق ناکام مہم جوئی کیلئے راز فاش کررہے ہیں۔مبشرلقمان نے کہا کہ اس کے بعد محمد بن سلمان نے اپنے والد اور چچا کو نظر بند کرکے جنرل کو ٹھکانے لگا دیا ۔اب سعودی عرب کے شہری اب اس معاملے پر سوال اٹھا رہے ہیں۔ مبشر لقمان کا کہنا ہے کہ گرفتار ہونے والے 20 افراد میں احمد بن عبدالعزیز بھی شا مل ہیں۔جو محمد بن سلمان کے لئے خطرہ بن گئے ہیں۔اب معاملہ نتیجے پر پہنچنے کے لئے تیار ہے۔ ولی عہد محمد بن سلمان کا خیال یہ ہے کہ ان کے والد کنگ سلمان ہر گزرتے دن کے ساتھ کمزور ہوتے جا رہے ہیں۔محمد بن سلمان کی یہ خواہش بھی ہے کہ کنگ سلمان خود ہی انہیں کنگ نامزد کردیں۔ تاکہ وہ جی 8 سمٹ کو ہیڈ کرسکیں، مبشر لقمان کا کہنا ہے کہ محمد بن سلمان کو اس بات کا ڈر ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ آئندہ الیکشن میں ہا ر گئے تو ڈیموکریٹک پارٹی میں ان کو وہ حمایت حاصل نہیں ہوگی، جس سے مشکلات میں اضافہ ہو سکتا ہے۔محمد بن سلمان کے ٹرمپ کے داماد کے ساتھ بڑے کارروبای تعلقات ہیں ۔ تاہم اس بات کو مد نظر رکھتے ہوئے ایم بی ایس نے ایسے اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا تاکہ انہیں کو حقیقی کنگ مانا جائے۔ایک اور ویڈیو میں مبشر لقمان کا کہنا تھا کہ سعودی شاہی خاندان میں بغاوت پر 20 سے زائد افراد کو گرفتا ر کرنے کے معلوم پر کہا ہے کہ یہ تمام تر گرفتار محمد بن سلمان کی خواہش پر ہوئی۔ ولی عہد محمد بن سلمان کا

خیال یہ ہے کہ ان کے والد کنگ سلمان ہر گزرتے دن کے ساتھ کمزور ہوتے جا رہے ہیں۔محمد بن سلمان کی یہ خواہش بھی ہے کہ کنگ سلمان خود ہی انہیں کنگ نامزد کردیں۔تاکہ وہ جی 8 سمٹ کو ہیڈ کرسکیں، مبشر لقمان کا کہنا ہے کہ محمد بن سلمان کو اس بات کا ڈر ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ آئندہ الیکشن میں ہا ر گئے تو ڈیموکریٹک پارٹی میں ان کو وہ حمایت حاصل نہیں ہوگی، جس سے مشکلات میں اضافہ ہو سکتا ہے۔ محمد بن سلمان کے ٹرمپ کے داماد کے ساتھ بڑے کارروبای تعلقات ہیں ۔تاہم اس بات کو مد نظر رکھتے ہوئے ایم بی ایس نے ایسے اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا تاکہ انہیں کو حقیقی کنگ مانا جائے۔یہ بات بھی قابل غورر ہے کہ اس سے قبل سعودی فرمانروا شاہ سلمان کی موت سے متعلق جھوٹی خبریں زیر گردش تھیں۔ سعودی فرمانروا شاہ سلمان اپنی مو ت اور بیماری کی خبروں کی تردید کر دی۔انہوں نے خود عام عوام میں آ کر اپنی صحت کے بارے میں اٹھنے والی افواہوں کے بارے میں بتایا ہے کہ انہیں کچھ نہیں ہوا، وہ بالکل ٹھیک ہیں۔اس سے قبل خبریں گردش کر رہی تھیں جس میں کہا جا رہا تھا کہ محمد سلمان اور محمد بن سلمان دونوں شدید بیمار ہیں اور کہا جا رہا تھا کہ محمد بن سلمان کرونا وائرس سے متاثر ہیں جس کے بعد انہیں امریکی ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ اس بارے میں بات کرتے ہوئے شاہ سلمان نے خود عام عوام میں آکر اپنی صحت کے بارے میں اٹھنے والی افواہوں کی تردید کی ہے۔ مبشر لقمان کا کیا کہنا تھا؟ ویڈیو آپ بھی دیکھیں