مسجدالحرام کی تاریخ کا پہلا واقعہ : پہلی بار دو موذن حضرات نے ایک اذان کو مکمل کیا ، مگر اسکی ضرورت کیوں پیش آئی ؟ حیران کن خبر

مکہ مکرمہ(ویب ڈیسک) مکہ مکرمہ میں مسجد الحرام کی تاریخ میں پہلی مرتبہ عشا کی اذان ایک موذن کے بجائے دو موذنوں نے مکمل کی۔ عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق مسجد الحرام میں پہلی مرتبہ ایک ایسا انوکھا واقعہ پیش آیا جس میں ایک موذن نے اذان دینا شروع کی اور دوسرے موذن نے اس اذان


کو مکمل کیا۔ سینئر موذن علی الملا عشاء کی اذان دے رہے تھے کہ اچانک ان کی طبیعت بگڑ گئی اور آواز دب گئی جس پر فوراً معاون موذن نے مائیک سنبھالا اور اذان مکمل کی سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو میں سنا جاسکتا ہے کہ اذان عشا پر موذن کی آواز اچانک دبنا شروع ہوگئی اور فوری طور پر نئی آواز نے اذان کو پورا کیا۔ مسجد الحرام میں اذان کے مقررہ نظام کے مطابق ہر فرض نماز کے لیے دو موذن موجود ہیں تاکہ کسی ناگہانی پر دوسرا موذن مائیک سنبھال لے۔