بھارتی انتخابی مہم میں کشمیر بنے گا پاکستان کے نعرے لگ گئے ۔۔۔۔ ہنگامہ کھڑا ہو گیا ،مودی کو شدید تنقید کا سامنا

نئی دہلی(ویب ڈیسک ) نئی دہلی کے ریاستی انتخابات کے لیے آٹھ فروری کو ووٹ ڈالے جائیں گے۔ اس کے لیے تمام سیاسی جماعتیں زور و شور سے انتخابی مہم چلا رہی ہیں لیکن یہ انتخابات بھارت بمقابلہ پاکستان کے نعرے میں تبدیل ہو رہے ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق بھارتی دارالحکومت دہلی میں رائے دہندگان کو اپنی طرف مائل کرنے کے لیے مختلف سیاسی جماعتیں

اپنی اپنی حکمت عملی کے ساتھ میدان میں اتر چکی ہیں۔دہلی کے وزیر اعلی اور عام آدمی پارٹی کے رہنما اروند کیجری وال نے مٹیالہ حلقے میں ایک روڈ سے اپنی پارٹی کے لیے انتخابی مہم کا آغاز کیا۔ عام آدمی پارٹی کا کہنا تھا کہ وہ انتخابات میں اپنی گزشتہ پانچ برس کی بدعنوانی سے پاک حکمرانی کے دوران ترقیاتی کاموں کے بل بوتے پر اتری ہے۔بی جے پی کا کہنا تھا کہ وہ دہلی کے انتخابات بھی نریندر مودی کی قیادت میں لڑیگی۔لیکن اس کے ایک رہنما کپل مسرا، جو ماڈل ٹاؤن علاقے سے پارٹی کے امیدوار ہیں، نے اپنے ایک متنازعہ بیان میں ان انتخابات کو بھارت بمقابلہ پاکستان قرار دیدیا۔ انہوں نے ایک ٹویٹ میں کہاکہ آٹھ فروی کو دہلی کی سڑکوں پر بھارت اور پاکستان کا مقابلہ ہوگا۔ان کی اس ٹویٹ پر بہت سے لوگوں نے اعتراض کیا اور سوال اٹھایا کہ دہلی کے انتخابات سے پاکستان کا کیا لینا دینا ہی اس کے جواب میں انہوں نے لکھاکہ عام آدمی پارٹی اور کانگریس نے شاہین باغ جیسے کئی علاقوں میں منی پاکستان کھڑے کیے ہیں۔ جواب میں آٹھ فروری کو ہندوستان کھڑا ہو گا۔