امریکا میں کتنے ہزار افراد بے گھر ہیں اور وہ گاڑیوں، چرچ، اسپتال یاپارک میں سونے پر مجبور ہیں ؟ ہوشربا تفصیلات پر مبنی رپورٹ

لاس اینجلس(ویب ڈیسک) امریکا میں بے گھر افراد کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے صرف کیلی فورنیا میں 16 ہزار بے گھر افراد کا رات کو گاڑیوں میں سونے کا انکشاف ہوا ہے۔امریکی نشریاتی ادارے کے مطابق امریکا میں بے گھر افراد کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے اور ان بے گھر افراد میں

سے کئی ہزار افراد ایسے ہیں جو مالی وسائل میں کمی کے باعث گھر کرائے پر نہ لینے کے سبب اپنی گاڑیاں کسی بھی اسپتال، کلب، چرچ یا کسی محفوظ جگہ پارک کرکے اس میں گزارنے پر مجبور ہیں۔آن لائن ٹیکسی سروس اوبر کےڈرائیور کی حیثیت سے کام کرنے والی خاتون لارن کش اپنی کار کو دو مقصد کے لیے استعمال کرتی ہیں۔ 36 سالہ لارن ایک بے گھر خاتون ہیں جو دن میں ٹیکسی چلاتی ہیں مگر ہر رات وہ اسی کار میں سوتی ہیں اپنی گاڑی کی عقبی نشست کو ایک بستر میں تبدیل کردیتی ہیں۔لارن کش نے لاس اینجلس میں مکان کرائے پر حاصل کرنے کی استطاعت ختم ہونے پر اپنی کار میں ہی سونے کا فیصلہ کیا جہاں ایک بیڈروم کے مکان کا درمیان کرایہ 2350 ڈالر ماہانہ ہے، لارن کشن کیلی فورنیا کے ان 16 ہزار بے گھر افراد میں سے ایک ہیں جو گھر کرائے پر نہ ملنے کے سبب اپنی کار میں سونے پر مجبور ہیں اور یہ یہاں موجود 60 ہزار بے گھر افراد کا ایک چوتھائی حصہ ہے۔‎جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق پاکستان پیپلزپارٹی کے رہنما قمرزمان کائرہ نے اپنی تقریر میں کہا کہ حکومت کی پالیسیوں کے خلاف پورا ملک کھڑا ہے، حکومت روزگار چھن رہی ہے اور صنعتیں بند ہورہی ہیں انہوں نے کہا کہ نیب عدلیہ، فوج اور حکومت کا حتساب نہیں کر سکتا۔ قمر زمان کائرہ نے کہاکہ ہمارے خلاف وزیراعظم کی شکل میں مصنوعی پودے لگائے گئے،ہمارے خلاف نئے غبارے میں ہوا بھری گئی۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان تم کیا جانو جہدوجہد کیا ہوتی ہے۔

انہوں نے کہاکہ 2002 میں ایک 2008 میں ایک بھی سیٹ حاصل نہیں کی،2013 میں لیڈر کی شکل میں عمران خان کو پیش کیا۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان نے جھوٹی نوکریوں کا وعدہ کیا،عمران خان سے قوم پوچھتی ہے کہ ڈیڑھ سال میں ایک کام اور ریلیف بتائیں۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان اپنی پالیسیاں جھوٹ بول کربنائی،عمران خان کی پالیسیوں کے خلاف پورا ملک کھڑا ہے،پاکستان کا ٹیکس کم ہورہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ سلیکٹر نے عمران خان کی حکومت بنانے کے لیے ق لیگ اور ایم کیو ایم کو ساتھ جوڑ دیا،ایم کیو ایم کو عمران خان ملک دشمن کہتے تھے،عمران خان کے ساتھ مل جانے والے پاک صاف ہو جاتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ نیب نہ فوج کا احتساب کر سکتی ہے نہ عدلیہ کا، نیب صرف ہمارا احتساب کرسکتی ہے۔ سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف نے جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ بے نظیر بھٹو کے ساتھ شہید ہونے والوں کے بچے بھی اسٹیج پر موجود ہیں،بے نظیر بھٹو نے ساری زندگی جدوجہد کی،بے نظیر بھٹو کے والد کو اسی شہر میں پھانسی دی،بے نظیر بھٹو نے ملک کی خاطر جان قربان کی،بے نظیر بھٹو کی شہادت سے ملک جل رہا تھا،آصف زرداری نے پاکستان کھپے کا نعرہ لگایا،جس مقام پر بے نظیر بھٹو کو شہید کیا بلاول اسی مقام پر آج کھڑا ہے۔ انہوں نے کہاکہ پیپلزپارٹی وفاق کی علامت ہے، بے نظیر وفاق کی زنجیر تھی،پاکستان پیپلزپارٹی ملک کے دفاع کی ضمانت ہے،پاکستان پیپلزپارٹی عوام کی قوت ہے،پیپلزپارٹی کے دور میں مہنگائی تھی یا آج مہنگائی ہے؟،ہم کہتے تھے بی بی آئے گی روزگار لائی گئی،اب بلاول بھٹو روزگار لائے گا۔انہوں نے کہاکہ پاکستان کو مظبوط بناکر مہنگائی ختم کریں گے۔