میں نے پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی کیا فارمولا استعمال کر کے کم کی ؟سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر نے رپورٹ ولی عہد کو پیش کر دی

ریاض(ویب ڈیسک) ترجمان سعودی سفارتخانے نے مزید کہا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے معاملات معمول پر آرہے ہیں۔عادل الجبیر کے دونوں ممالک کے دوروں کو بہت پذیرائی ملی سعودی سفارتخانے نے مزید کہا عادل الجبیر کے دورے سعودی قیادت کی ہدایت کی روشنی میں ہوئے۔ عادل الجبیر نے علاقائی سلامتی و امن کو

معمول پر لانے میں اہم کردار ادا کیا۔تفصیلات کے مطابق سعودی سفارتخانے نے کہا ہے کہ پاک بھارت معاملات معمول پر لانے میں ریاض نے اہم کردار اداکرتے ہوئے علاقائی امن خراب ہونے سے بچالیا۔وزیر مملکت خارجہ عادل الجبیر کے دونوں ملکوں کے دورے بھی اسی سلسلے کی کڑی تھے۔ ترجمان سعودی سفارتخانے نے مزید کہا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے معاملات معمول پر آرہے ہیں۔عادل الجبیر نے علاقائی سلامتی و امن کو معمول پر لانے میں اہم کردار ادا کیا۔دوسری طرف سعودی کابینہ کا اجلاس خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی زیر صدارت ریاض کے قصر یمامہ میں منعقد ہوا۔میڈیارپورٹس کے مطابق کابینہ نے پاکستان اور ہندوستان کے درمیان کشیدگی کم کرانے سے متعلق سعودی قیادت کے مشن کے نتائج پر مشتمل رپورٹ وزیر مملکت برائے امور خارجہ عادل الجبیر سے سنی۔ الجبیر شاہی ہدایت پر پاکستان اور ہندوستان کے دورے پر گئے تھے۔ انہوں نے وہاں دونوں ملکوں کے درمیان گرما گرمی کو کم کرنے اور حالات کو معمول پر لانے کے حوالے سے سعودی قیادت کی ہدایات کے مطابق ملاقاتیں کرکے مذاکرات کئے۔ انہوں نے خطے میں امن و استحکام کو متاثر کرنے والے کسی بھی اقدام سے دونوں ملکوں کو باز رکھنے کی بابت سعودی قیادت کا پیغام دونوں ملکوں کے رہنماؤں کو پہنچایا۔اجلاس کے آغاز میں شاہ سلمان نے لبنانی وزیراعظم سعد الحریری سے اپنی ملاقات اور اس موقع پر سعودی عرب اور لبنان کے درمیان تعاون کو فروغ دینے کے طریقوں او رخطے کے حالات حاضرہ پر تبادلہ خیال کے نتائج سے کابینہ کو آگاہ کیا۔