بریکنگ نیوز: وکلاء تنظیموں نے سینئر قانون دان اعتزاز احسن پر پابندی لگا دی مگر کیوں؟ افسوسناک انکشاف

راولپنڈی (ویب ڈیسک) وکلاء تنظیموں نے سینئر قانون دان اعتزاز احسن پر بھی پابندی لگا دی، پی آئی سی ہسپتال لاہور پر حملے کی مذمت کرنے پر راولپنڈی بار نے رہنما پیپلز پارٹی کے ضلعی بار اور ہائیکورٹ بار میں داخلے پر پابندی لگا دی۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز لاہور میں پنجاب کے سب

سے بڑے امراض قلب کے ادارے پی آئی سی پر حملہ کرنے کے بعد وکلاء نے بجائے شرمندگی کا اظہار کرنے کے، ڈھٹائی کے ساتھ اپنے ساتھیوں کا دفاع کرنے شروع کر دیا ہے۔گزشتہ روز کے افسوسناک واقعے پر سینئر قانون دان اعتزاز احسن نے وکلاء کی طرز عمل کی شدید مذمت کی تھی۔ اب وکلاء نے گزشتہ روز کے واقعے کی مذمت کرنے پر اعتزاز احسن کو بھی نشانے پر رکھ لیا ہے۔ پی آئی سی ہسپتال لاہور پر حملے کی مذمت کرنے پر راولپنڈی بار نے رہنما پیپلز پارٹی کے ضلعی بار اور ہائیکورٹ بار میں داخلے پر پابندی لگا دی ہے۔جمعرات کے روز راولپنڈی بار کے وکلاء نے اجلاس بلایا اور پھر فیصلہ کیا کہ آئندہ سے اعتزاز احسن کو راولپنڈی میں ضلعی اور ہائیکورٹ بار میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز مشتعل وکلاء نے لاہور کے پی آئی سی ہسپتال پر حملہ کر کے ناصرف ہر طرف تباہی مچا دی تھی، بلکہ وکلاء کے اس حملے کے باعث ہسپتال میں زیر علاج 4 مریض بھی جان کی بازی ہار گئے۔ وکلاء نے ہسپتال پر حملہ کر کے پولیس، ڈاکٹرز، دیگر طبی عملے اور مریضوں تک کو تشدد کا نشانہ بنایا اور شدید توڑ پھوڑ کی۔ واقعے کے بعد سے پولیس نے شرپسند وکلاء کیخلاف کریک ڈاون شروع کر دیا ہے اور اب تک کئی وکلاء گرفتار کیے جا چکے ہیں۔