Categories
پا کستا ن

والدین کیلئے اہم خبر !!!NCOC کا تعلیمی اداروں کے حوالے سے بڑا اعلان

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) این سی او سی نے کورونا کی بگڑتی صورتحال کے پیش نظر 10 فیصد سے زائدشرح والے شہروں میں 50 فیصد حاضری کے ساتھ تعلیمی ادارے کھولنے کا اعلان کر دیا۔تفصیلات کے مطابق نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے کورونا کیسز میں اضافے کے پیش نظر تعلیمی اداروں کے حوالے سے کہا کہ

10 فیصد سے زائدشرح والے شہروں میں اسکولوں میں 50فیصد بچوں کی اجازت ہوگی۔اعلامیے میں کہا گیا کہ 10فیصد سے زائدشرح پر 12سال سےکم بچوں کی نصف تعداد اسکول جاسکےگی جبکہ 12 سال سے زائد عمر100 فیصد طلبا اسکول آئیں گے۔این سی او سی کا کہنا ہے کہ ملک بھر کے تعلیمی اداروں میں بھرپور کورونا ٹیسٹنگ آئندہ 2ہفتے ہو گی جبکہ بلند شرح والے تعلیمی ادارے ایک ہفتہ بند رکھےجائیں گے۔این سی اوسی نے 12سال سے زائد عمر طلبا کی کورونا ویکسینیشن لازمی قرار دیتے ہوئے کہا 12سال سے زائد عمر کے طلباکی ویکسینیشن کا آغاز یکم فروری سے ہو گا۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے کہا کہ تعلیمی اداروں میں 100فیصدطلبہ کی ویکسینیشن یقینی بنائی جائےگی ، ویکسینیشن سے استثنیٰ کیلئے طلبہ کو میڈیکل سرٹیفکیٹ پیش کرنا ہو گا جبکہ ویکسینیشن نہ کرانےوالےطلبہ تعلیمی سہولتوں سے محروم رہیں گے۔ملک میں کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر این سی او سی نے اہم پابندیوں کا فیصلہ کیا ہے، نئی پابندیوں کا فیصلہ صوبوں کی مشاورت سے کیا گیا ہے، پابندیوں کا اطلاع 20 سے 31 جنوری تک ہو گا۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر (این سی او سی ) کا اجلاس وفاقی وزیر اسد عمر کی زیر صدارت ہوا۔این سی او سی نے اِن ڈور ڈائننگ پابندی عائد کر دی۔10 فیصد سے زائد شرح والے شہروں میں انڈور تقریبات پر پابندی عائد ہو گی۔یکم فروری سے 12 سال سے زائد عمر کے بچوں کے لیے ویکسینیشن لازمی قرار دی گئی۔آؤٹ ڈور تقریبات میں 300 افراد شامل ہو سکتے ہیں۔10 فیصد سے کم والی شرح والے شہروں

میں آؤٹ ڈور تقریبات میں 500 افراد شامل ہو سکتے ہیں۔این سی او سی نے فیصلہ کیا ہے کہ تقریبات میں صرف ویکسینیٹڈ افراد ہی شریک ہو سکیں گے۔شادی ہالز پر پابندی کا اطلاق 15 فروری تک رہے گا۔مزارات ، جم ، سینما،پارکس میں گنجائش کے مطابق دونوں ویکسینیشن والے 50 فیصد افراد کی اجازت ہو گی۔این پی آئیز کے حوالے سے دوبارہ اجلاس 27 جنوری کو ہو گا۔این سی او سی 27 جنوری کو اجلاس میں صورتحال کا جائزہ لے گا۔خیال رہے کہ پاکستان کورونا مریضوں میں مسلسل اضافہ ہو نے لگا،شرح گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران بڑھ کر ساڑھے 9 فیصد کے قریب ہو گئی، ایکٹیو کیسز کی تعداد 44 ہزار 717 تک جا پہنچی۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کے اعداد و شمار کے مطابق پاکستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے مزید 5 ہزار 472 کیسز سامنے آئے ہیں، مزید 8 مریض اس موذی وباء کے سامنے زندگی کی بازی ہار گئے، اس کے مزید 628 مریض شفایاب ہو گئے، ، مثبت کیسز کی شرح 9 اعشاریہ 48 فیصد پر آگئی۔ پاکستان بھر میں اب تک 29 ہزار 37 کورونا وائرس کے مریض انتقال کر چکے ہیں جبکہ اس موذی وائرس کے کٴْل مریضوں کی تعداد 13 لاکھ 38 ہزار 993 ہو چکی ہے۔ملک بھر میں ہسپتالوں، قرنطینہ سینٹرز، وینٹی لیٹرز اور گھروں میں کورونا وائرس کے 44 ہزار 717 زیرِ علاج مریضوں میں سے 908 کی حالت تشویش ناک ہے، جبکہ 12 لاکھ 65 ہزار 239 مریض اب تک اس بیماری سے شفایاب ہو چکے ہیں۔

Categories
پا کستا ن

’’کلثوم نواز نے 1999ء میں مجھے آ کر بتایا کہ ۔۔۔۔‘‘ عمران خان اگلی حکومت بنا پائیں گے؟ اعتزاز احسن کے تہلکہ خیز انکشافات

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) سینئرقانون دان اعتزاز احسن نے اہم رازوں سے پردہ اٹھاتے ہوئے کہا 1999 میں نوازشریف کا وکیل تھا ، نوازشریف کہتے تھے لڑیں گے مریں گے لیکن وہ ڈیل کر کے ملک سےبھاگ گئے۔تفصیلات کے مطابق سینئرقانون دان اعتزازاحسن نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام الیونتھ آور میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا ن لیگ کی جانب سےبات چیت چل رہی ہوتی ہے،

ن لیگ کی سیاست ہے ، کبھی خود کو کبھی ڈیل سے الگ نہیں کرتے، جیل میں ہوتےہیں اورمشرف سمیت کئی طاقتوں سے بات چل رہی ہوتی ہے، سعودی حکمراں ،لبنان کی حراری فیملی سےبات کررہےہوتےہیں۔اعتزازاحسن نے بتایا 7اکتوبرکوکلثوم بی بی نےمجھ سےآکرکہانوازشریف کہتےہیں لڑمرو، کلثوم نوازکےمطابق نوازشریف کہتےہیں جدوجہد کو تیزکرو، 9 اکتوبر کی شام کو مجھ فون آنا شروع ہوئے کہ نوازشریف جارہےہیں، میں نےان سےکہانوازشریف کہیں نہیں جارہے۔سینئرقانون دان کا کہنا تھا کہ میں اور میری ٹیم دو دن کیس کی تیاری میں لگے رہے،شریف برادران کےجانےکافیصلہ اچانک تونہیں ہواہوگا۔ ویزا ،ٹکٹ یہ سب چیزیں پہلےسےکرنی پڑتی ہیں۔ میں نوازشریف کاوکیل تھا اوران کےجانےکا مجھے ہی نہیں پتہ تھا۔انھوں نے مزید کہا کہ منصوبے کے تحت مجھے کہا گیا نوازشریف کہیں نہیں جارہے، اگلےدن اخبارمیں تصویرچھپی ہے نوازشریف اورکلثوم بی بی جارہےہیں، اسی تصویر کے نیچے میری خبرلگی ہوئی تھی کہ نوازشریف کہیں نہیں جارہے۔اعتزازاحسن کا کہنا تھا کہ نوازشریف اورن لیگ آج بھی فرمانبردارہے، شاہدخاقان نےکہاہمارےکندھوں پرہاتھ رکھ دو، واضح کہاگیاوہاں سےہاتھ اٹھاؤ اوریہاں پررکھو۔سینئرقانون دان نے کہا کہ نوازشریف نے1999میں آرمی چیف کا جہازہی قبضے میں لے لیا تھا، نوازشریف نےعدالتوں میں جودستاویزپیش کیں وہ جعلی تھیں، جس دن ارشدملک کی ویڈیو آئی اسی دن کہا تھا، عدالت میں پیش کریں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ریاست برداشت نہیں کرتی کہ سابق وزیراعظم وعدہ کرکے ملک سےجائے پھر واپس نہ آئے۔ اب نوازشریف کےاقتدارمیں آنےکی بات میرے لیے انوکھی بات ہوگی، نون لیگ تتر بتر ہوچکی۔لانگ مارچ کے حوالے سے اعتزازاحسن نے کہا کہ مولانا نے تو 23مارچ کااعلان کیا،بلاول نےپہلےہی اعلان کردیا ، لانگ مارچ سےحکومت گرانااتناآسان نہیں ہے ، میرےخیال میں عمران خان کےپی میں دوبارہ حکومت کرلے گا۔سینئرقانون دان کا کہنا تھا کہ لانگ مارچ سےحکومت گرانااتناآسان نہیں ہے، نوازشریف ججزبحالی تحریک میں بھی باہرنکلتےہی نہیں تھے، جی پی اوچوک پر نواز شریف کا انتظارکرتے رہے.بلاول سے متعلق انھوں نے کہا کہ بلاول بھٹونوجوان شریف خاندان سے آگے نکل گیا ہے اور بہت تیزی سے سیکھ رہے ہیں۔عمران خان سے متعلق اعتزازاحسن کا کہنا تھا کہ عمران خان کے جانے کا امکان کم ہے گیا تو اپنی غلطی سے جائے گا۔فارن فنڈنگ کیس کے بارے سینئرقانون دان نے کہا فارن فنڈنگ کیس کی زدمیں تمام جماعتیں آئیں گی، پولیٹیکل ایکٹ 1961کوکسی نےبھی سنجیدگی سےنہیں لیا، میرا خیال ہے فارن فنڈنگ معاملے پر قانون سازی ہوگی۔

Categories
پا کستا ن

شاہد خاقان عباسی کے انکشاف نے حکومتی صفوں میں کھلبلی مچا دی

لاہور (ویب ڈیسک) مسلم لیگ (ن) کے سینیئر رہنما اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کاکہنا ہے کہ الیکشن جیتنے کے بعد پارٹی وزیراعظم کے امیدوار کا فیصلہ کرتی ہے ۔نجی ٹی وی جیو نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ فوادچوہدری نے جو باتیں کی ہیں سمجھ سے باہر ہیں،ان کی باتیں صرف توجہ حاصل کرنے کی کوشش

ہے۔شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ وزیراعظم کے امیدوار سے متعلق فیصلے جماعت وقت پر کرتی ہے جبکہ میں وزیراعظم کے عہدے کا خواہشمند ہوں نہ طلب گار ۔ان کا کہنا تھا کہ ہم اقتدار کے خواہشمند نہیں، ہم چاہتے ہیں ملک کا نظام آئین کے مطابق ہو، جبکہ آج ملک کی ضرورت ہے کہ عوام کو شفاف الیکشن ملیں۔اس کے علاوہ شاہد خاقان عباسی نے دعویٰ کیا کہ وہ 22افراد کو جانتے ہیں جو اب حکومت کے ساتھ نہیں رہنا چاہتے اور دیکھناحکومت ایک دن بیساکھیوں کے بغیر نہیں رہ سکتی۔ انہو ں نے کہا کہ22 لوگ ہٹ جائیں تو حکومت اکثریت کھو دے گی پھر شاید عدم اعتماد کی ضرورت نہ پڑے۔اس کے علاوہ انہوں نے مزید کہا کہ ہم انتطار کررہے ہیں کہ ملک کا نظام آئین کے مطابق چلے جبکہ اس حکومت کے ساتھ نہ اتحادی اور نہ بہت سے ارکان ساتھ چلنا چاہتے ہیں۔واضح رہے کہ اس سے قبل پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے وزرا کی جانب سے نواز شریف کے خلاف ن لیگ میں بغاوت کے دعوے کیے جارہے تھے۔وفاقی وزیر برائے اطلاعات و نشریات فواد چوہدری کا کہنا تھاکہ ن لیگی قیادت نواز شریف کا پتہ صاف کرنے پر تلی ہے۔ ن لیگ میں ریس لگی ہوئی ہے، پہلی صف میں بیٹھنے والے چار لیڈرز نواز شریف کو ہٹاکر خود قیادت سنبھالنا چاہتےہیں۔

Categories
پا کستا ن

پنجاب میں بلدیاتی انتخابات کس تاریخ کو ہونگے؟بالاخر حکومت نے اعلان کر دیا

لاہور ( نیوز ڈیسک ) پنجاب حکومت نے بلدیاتی انتخابات کیلئے 15 مئی کی تاریخ کا اعلان کر دیا۔نجی ٹی وی دنیا نیوز کے مطابق وزیر بلدیات پنجاب میاں محمود الرشید نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات کے انتظامات کو حتمی شکل دینے کیلئے پلان مرتب کرلیا ہے، پنجاب میں 15 مئی کو بلدیاتی انتخابات ہوں گے ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہے کہ نئی

لوکل حکومت کو مقامی حکومتوں کا با اختیار نظام دیں ، اس سے قبل کسی حکومت نے بلدیاتی اداروں کاکام نہیں کرنے دیا ، ادارے بے اختیار تھے ، ارکان اسمبلی اور وزراء وہ کام کرتے تھے جو بلدیاتی اداروں کا تھا ، وہ کبھی فنڈز تو کبھی ٹھیکیداروں کے پیچھے ہوتے تھے ۔میاں محمود الرشید نے کہا کہ ہمارا اصل کام عوامی مسائل کا حل اور قانون سازی ہے۔

Categories
پا کستا ن

منحرف ہونے والے لڑکا لڑکی عدالت میں پیش ،متاثرہ جوڑے نےمُکرنے کی وجہ کیا بتائی؟

اسلام آباد ( نیوز ڈیسک ) وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں عثمان مرزا کیس میں اہم پیشرفت سامنے آگئی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق اسلام آباد ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت نے عثمان مرزا کی جانب سے لڑکا لڑکی کیس کی سماعت کی جہاں منحرف ہونے والے متاثرہ لڑکا لڑکی عدالت میں پیش ہوئے کیوں کہ ایڈیشنل سیشن

جج عطا ربانی کی طرف سے دونوں کے وارنٹ گرفتاری جاری کیے گئے تھے۔بتایا گیا ہے کہ سماعت کے دوران فاضل جج نے ملزمان کی 6 جولائی کو وائرل ہونے والی ویڈیو بند کمرے میں چلانے کا فیصلہ کیا اور سماعت ان کیمرہ ڈیکلیئر کردی ، جس کے باعث کمرہ عدالت سے غیر متعلقہ افراد اور صحافیوں کو باہر نکال دیا گیا ، جب کہ دوران سماعت مثاثرہ لڑکے اسد کے بیان پر پراسکیوٹر رانا حسن عباس نے جرح کی۔جرح کے دوران منحرف گواہ اور متاثرہ لڑکے اسد نے عدالت کو بتایا کہ میری تعلیم انٹر ہے ، اس وقت کوئی کام بھی نہیں کرتا تاہم جب یہ واقعہ ہوا میں پراپرٹی کا کام کرتا تھا کیس شروع ہوا تو پراپرٹی کا کام چھوڑ دیا ، جس کی وجہ سے میرے مالی معاملات بہت خراب ہیں اور والدین میرا خرچہ چلا رہے ہیں ، مقدمہ کے اندراج کے بعد تھانہ گولڑہ میں 4 سے 5 دفعہ گیا ، 8 جولائی کو میں نے بیان ریکارڈ نہیں کرایا بلکہ صرف سادہ پیپر پر مجھ سے انسپکٹر شفقت نے دستخط لیے۔اس موقع پر پبلک پراسیکیوٹر نے کہا کہ بیان حلفی میں آپ کہتے ہیں ویڈیو میں نظر آنے والے وہ ملزمان نہیں ہیں ، کیا آپ کو واقعہ یاد ہے؟ کیا آپ بتا سکتے ہیں اس دن کیا ہوا تھا؟ ، اس پر متاثرہ لڑکے اسد نے کہا کہ جی مجھے وہ واقعہ یاد ہے لیکن ابھی میں اس واقعے کی تفصیل نہیں بتا سکتا اور نہ ہی مجھے یاد ہے کہ میں نے اور سندس نے اس روز کس رنگ کی شرٹ پہن رکھی تھی ، بعد ازاں پراسکیوٹر رانا حسن عباس نے متاثرہ لڑکی پر بھی ان کیمرہ عدالتی کارروائی کے دوران ہی جرح مکمل کی ، جس کے بعد سماعت ملتوی کردی گئی۔

Categories
شوبز

عرش سے فرش پر گرنے والی اداکارہ !!! تصویر میں نظر آنے والی اداکارہ کون ہیں ،انکے ساتھ کیا ہوااور آج انکی زندگی میں کونسا اہم دِن ہے؟

ممبئی(مانیٹرنگ ڈیسک)بھارت کی فلم انڈسٹری بالی ووڈ اداکارہ مونیکا بیدی کا آج 47واں یوم پیدائش ہے ، وہ ماضی میں کئی بڑی فلموں کا حصہ رہی تھیں ،جب وہ کیریئر کی اونچائیوں کو چھو رہی تھیں، بڑی بڑی فلمیں ان کی جھولی میں تھیں، تبھی ان کی زندگی میں کوئی ایسا آیا، جس نے ان کی پوری زندگی بدل کر رکھ دی۔ مونیکا بیدی دیکھتے ہی دیکھتے

عرش سے فرش پر آگئیں۔ بھارت کے نجی ٹی وی کی ویب رپورٹ کے مطابق مونیکا بیدی کا آج 47واں جنم دن ہے اور کبھی انڈسٹری کی سب سے مہنگی اداکارہ میں نام شمار ہونے کے بعد آج وہ فلمی دنیا سے دور ہیں، جس کی وجہ بنا ان کا پیار۔ مونیکا بیدی کئی بڑی فلموں کا حصہ رہی تھیں، جب مونیکا بیدی کیریئر کی اونچائیوں کو چھو رہی تھیں، تبھی ان کی زندگی میں کوئی ایسا آیا، جس نے ان کی پوری زندگی بدل کر رکھ دی۔ مونیکا دیکھتے ہی دیکھتے عرش سے فرش پرآگئیں۔ نہ صرف ان کا کیریئر، ان کی شبیہ پر بھی خطرہ تھا۔ یہ شخص تھا انڈر ورلڈ ڈان ابو سلیم۔ یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایک وقت پر ابو سلیم کے ساتھ مونیکا بیدی کی لو سٹوری کا ہر طرف چرچا تھا۔ ابو سلیم سے پیار کرنے کا مونیکا بیدی کو بہت بڑا خمیزاہ بھگتنا پڑا تھا۔ مونیکا بیدی نے خود ہی ابو سلیم کے ساتھ اپنی لو سٹوری پر بات کرتے ہوئے بتایا تھا کہ انہوں نے ابو سلیم کا نام سنا تھا، لیکن ان کے بارے میں انہین کوئی معلومات نہیں تھی۔مونیکا بیدی نے بتایا کہ 1998 میں ان کی پہلی بار ابو سلیم سے بات ہوئی تھی۔ ان دنوں وہ اپنے ایک سٹیج شو میں شرکت کیلئےدبئی میں تھیں اور یہیں وہ پہلی بار ابو سلیم سے ملی تھیں۔ ابو سلیم نے مونیکا بیدی سے اپنا تعارف ایک تاجر کے طور پر کروایا۔ ابو سلیم کے بات کرنے کا انداز مونیکا بیدی کو بے حد پسند آیا اور وہ ابو سلیم کو پسند کرنے لگیں۔ اس کے بعد دونوں کے درمیان اکثر بات ہونے لگی۔ مونیکا کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ میں اس سے پیار کرتی تھی، یہ تو نہیں کہوں گی، لیکن، میں اسے پسند ضرور کرنے لگی تھی۔ مونیکا بیدی کے مطابق، انہیں ابو سلیم کا اصلی نام بھی نہیں معلوم تھا۔ اپنے انٹرویو میں انہوں نے بتایا ’جب ہم پرتگال میں گرفتار ہوئے تو تب بھی اس نے اپنا نام ارسلان علی بتایا تھا۔ وہ نہیں چاہتا تھا کہ میں دبئی سے واپس ممبئی جاؤں۔ اس نے ایک دن مجھے فون کیا اور کہا کہ میں دبئی آجاؤں، کیونکہ اگر میں ممبئی میں رہی تو مشکل میں پھنس سکتی ہوں‘۔

Categories
پا کستا ن

برفباری کا شدید طوفان!!! پی آئی اے کا طیارہ برفباری کی زَد میں آگیا

ٹورنٹو (نیوزڈیسک) کینیڈا کے شہر ٹورنٹو میں ہونے والی شدید برفباری میں پی آئی اے کا طیارہ بڑی تباہی سے بچ گیا، کپتان نے اپنی ماہرانہ کارکردگی سے بحفاظت اتار لیا۔اس حوالے سے پی آئی اے ذرائع کا کہنا ہے کہ بوئنگ777طیارہ ٹورنٹو ایئرپورٹ کے قریب تھا کہ شدید برفباری شروع ہوگئی اور طیارہ برفانی طوفان کی

زدمیں آگیا۔پی آئی اے کے کپتان نے حاضر دماغی اور مہارت کا مظاہرہ کرتے ہوئے طیارے کو کنٹرول کیا اور بحفاظت ٹورنٹو ایئرپورٹ پر اتار لیا۔طیارے کی لینڈنگ ہوتے ہی ٹورنٹو ایئرپورٹ اتھارٹی کے عملے نے رن وے اور اطراف کے ایریا کو کور کیا اور ہنگامی بنیاد پر مشینری کے ذریعے برف ہٹانے کا کام شروع کردیا۔ذرائع کے مطابق پروازپی کے797لاہور سے ٹورنٹو پہنچی تھی، پرواز کو بحفاظت اتارنے پر پی آئی اے کے سی ای او ارشد ملک نے کپتان اور فضائی عملے کو شاباشی دیتے ہوئے ان کی کارکردگی کو سراہا۔سی ای او ارشد ملک نے ٹورنٹو ایئرپورٹ انتظامیہ کا بھی شکریہ ادا کیا جنہوں نے رن وے پر سے فوری طور پر برف ہٹا کر طیارے کو پارک کروایا۔

Categories
کھیل

محمد رضوان کا اس حد تک احترام۔۔!! معروف سپورٹس جرنلسٹ ’ زینب عباس‘ نے کیا کر دیا؟ پاکستانی انکے گرویدہ ہوگئے

لاہور (نیوز ڈیسک ) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی جانب سے قومی ٹیم کو دیے گئے عشائیے میں زینب عباس انٹرویو کے دوران کرکٹر محمد رضوان کا احترام کرتے ہوئے ان سے بات چیت کیلئے ان کے پیچھے چلی گئیں۔ سوشل میڈیا صارفین زینب عباس کے اس عمل کو سہراتے ہوئے ان کی تعرفیں کررہے ہیں۔ پاکستان کرکٹ بورڈ نے کچھ

دنوں قبل 2021ء میں شاندار کارکردگی دکھانے والے کھلاڑیوں کے اعزاز میں ایک تقریب منعقد کی جس کی میزبانی زینب عباسی کررہی تھیں۔دوران تقریب زینب قومی ٹٰیم کے کھلاڑیوں کے پاس جا کر کچھ سوال کررہی تھیں، اسی دوران جب زینب محمد رضوان کی طرف گئیں تو وہ کرکٹر کی پیٹھ کی جانب ہوگئیں تاکہ رضوان کھل کر بات کرسکیں۔زینب کے اس عمل کو سوشل میڈیا کی جانب سے کافی تعریف کی جارہی ہے۔واضح رہے کہ چند روز قبل رضوان نے ایک انٹرویو کے دوران خواتین کے ساتھ تصویریں نہ لینے کی وجہ بھی بتائی تھی۔ جب ان سے پوچھا گیا کہ وہ خواتین کے بارے میں اتنا شرمیلے کیوں ہیں تو رضوان نے کہا کہ یہ شرمندہ ہونے کے بارے میں نہیں ہے لیکن کچھ چیزیں ذاتی ہوتی ہیں اور ہر کھلاڑی کی اپنی ذاتی وجوہات ہوتی ہیں۔

Categories
پا کستا ن

این سی او سی نے بڑی پابندیاں عائد کر دیں

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) ملک میں کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر این سی او سی نے اہم پابندیوں کا فیصلہ کیا ہے، نئی پابندیوں کا فیصلہ صوبوں کی مشاورت سے کیا گیا ہے، پابندیوں کا اطلاع 20 سے 31 جنوری تک ہو گا۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر (این سی او سی ) کا اجلاس وفاقی وزیر اسد عمر کی زیر صدارت ہوا۔این سی او سی نے اِن

ڈور ڈائننگ پابندی عائد کر دی۔10 فیصد سے زائد شرح والے شہروں میں انڈور تقریبات پر پابندی عائد ہو گی۔یکم فروری سے 12 سال سے زائد عمر کے بچوں کے لیے ویکسینیشن لازمی قرار دی گئی۔آؤٹ ڈور تقریبات میں 300 افراد شامل ہو سکتے ہیں۔10 فیصد سے کم والی شرح والے شہروں میں آؤٹ ڈور تقریبات میں 500 افراد شامل ہو سکتے ہیں۔این سی او سی نے فیصلہ کیا ہے کہ تقریبات میں صرف ویکسینیٹڈ افراد ہی شریک ہو سکیں گے۔شادی ہالز پر پابندی کا اطلاق 15 فروری تک رہے گا۔مزارات ، جم ، سینما،پارکس میں گنجائش کے مطابق دونوں ویکسینیشن والے 50 فیصد افراد کی اجازت ہو گی۔این پی آئیز کے حوالے سے دوبارہ اجلاس 27 جنوری کو ہو گا۔این سی او سی 27 جنوری کو اجلاس میں صورتحال کا جائزہ لے گا۔خیال رہے کہ پاکستان کورونا مریضوں میں مسلسل اضافہ ہو نے لگا،شرح گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران بڑھ کر ساڑھے 9 فیصد کے قریب ہو گئی، ایکٹیو کیسز کی تعداد 44 ہزار 717 تک جا پہنچی۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کے اعداد و شمار کے مطابق پاکستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے مزید 5 ہزار 472 کیسز سامنے آئے ہیں، مزید 8 مریض اس موذی وباء کے سامنے زندگی کی بازی ہار گئے، اس کے مزید 628 مریض شفایاب ہو گئے، ، مثبت کیسز کی شرح 9 اعشاریہ 48 فیصد پر آگئی۔ پاکستان بھر میں اب تک 29 ہزار 37 کورونا وائرس کے مریض انتقال کر چکے ہیں جبکہ اس موذی وائرس کے کٴْل مریضوں کی تعداد 13 لاکھ 38 ہزار 993 ہو چکی ہے۔ملک بھر میں ہسپتالوں، قرنطینہ سینٹرز، وینٹی لیٹرز اور گھروں میں کورونا وائرس کے 44 ہزار 717 زیرِ علاج مریضوں میں سے 908 کی حالت تشویش ناک ہے، جبکہ 12 لاکھ 65 ہزار 239 مریض اب تک اس بیماری سے شفایاب ہو چکے ہیں۔

Categories
پا کستا ن

’’ عمران خان کی نیت پر شک نہیں کرتا مگر۔۔۔۔‘‘ تحریک انصاف میں کیا کچھ ہو رہا ہے؟ ارشاد بھٹی بھی بول پڑے

اسلام آباد(نیوز ڈیسک ) نواز شریف کی وطن واپس آئیں گے یا نہیں یہ ہی ہلچل مچی ہوئی ہے، مختلف نیوز چینلز پر اس حوالےسے تجزیے اور تبصرے کیے جاتے ہیں، جیونیوز کے پروگرام کیپیٹل ٹاک میں بھی اس حوالے سے گفتگو کی گئی۔سینیئر تجزیہ کار ارشاد بھٹی نے مریم نواز کی نواز شریف کے متعلق پوسٹ پر کیپشن پر دلچسپ تبصرہ کیا،

ارشاد بھٹی نے مریم نواز کی نواز شریف کے متعلق پوسٹ پر دلچسپ جواب دیا، اور کہا کہ نواز شریف آٹھ ہفتوں کا کہہ کر گئے اب تک نہیں آئے، میں آپ کیلئے اور ڈھولے بناؤں گا واپس آجائیں۔ارشاد بھٹی کے مریم اورنگزیب کی جانب سے وزیر اعظم کے ریاست مدینہ کے کالم پر اعتراضات کے حوالے سے کہا کہ نواز شریف صاحب امیرالمومنین بننے جارہے تھے، وہ ایک ترمیم کرنے جارہے تھے، ہم استغفراللہ سے بھی بچ گئے، ان للہ سے بھی بچ گئے۔ارشاد بھٹی نے کہاکہ عمران خان صاحب کی نیت پر میں شک نہیں کرتا، یہ ان کا اللہ کا معاملہ ہے کہ وہ ریاست مدینہ بنانا چاہتے ہیں،ساڑھے تین سالوں میں ملک کو ریاست مدینہ بنانے کیلئےزیرو کام کیا گیا۔ارشاد بھٹی نے کہا عوام کی اخلاقی تشکیل نو کیلئے عمران خان صاحب نے کیا کیا؟ صحت کارڈ، لنگر خانے ان سب سے ہم بھکاری بنیں گے، علم وہنر کی آگاہی صفر بٹا صفرہے،عمران خان صاحب بتائیں کہ ادویات والے، پنڈورا لیکس والے، آٹا چینی والے پکڑے گئے؟تمباکو اور شوگر مافیا، بی آر ٹی والے، مالم جبہ والے نہ جانے کیا کیا ہورہاہے کیا ان سب کو پکڑ لیا گیا؟سینیئر تجزیہ کار نے مزید کہا کہ اپوزیشن کے مکار، کرپٹ لوگوں کو چھوڑیں کیا عمران خان کے گرد مکار، چالاک، امیر، مافیا کرپٹ لوگ نہیں؟عمران خان صاحب بائیس سال جو نعرے بلند کرتے رہے اس میں مذہب کارڈ نہیں تھا، مذہب ہر شخص کا ذاتی مسئلہ ہے، فاطمہ جناح کیخلاف مذہب کارڈ استعمال ہوا، ضیاء الحق، نوازشریف سمیت سب کے خلاف مذہب کارڈ استعمال ہوا،پاکستان تحریک انصاف ریاست مدینہ کے اصولوں پر نہیں چل رہی۔