پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ نے گیارہویں جماعت کی سوشیالوجی پر کیوں پابندی لگائی؟جانیں گے تو دنگ رہ جائیں گے

لاہور(نیوزڈیسک)اسلام مخالف مواد کی اشاعت پر پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ نے گیارہویں جماعت کی سوشیالوجی پر پابندی لگا دیگیارہویں جماعت کی کتاب میں متنازع مواد شائع ہونے کا انکشاف ہونے پر پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ نے ”آئینہ عمرانیات“ پر پابندی عائد کر دی۔ماہرین تعلیم کی جانب سے اعتراضات اُٹھائے جانے کے بعد ہوش آیا تو پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ اینڈ کریکولم

Almarah Advertisement

اتھارٹی نے متنازع مواد والی کتاب پبلش کرنے پر نوٹس لیا۔کتاب کے صفحہ 242 پر اسلام کو معاشرتی تبدیلی میں رکاوٹ قرار دیا گیا ہے۔ ساتھ ہی پردے کو بھی معاشرتی تبدیلی میں رکاوٹ قرار دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ عورتوں کو مردوں کے ساتھ چلنا ہوتا ہے، اس لئے یہ پردہ بھی ایک رکاوٹ ہے۔کتاب کے مصنفین پروفیسر عبدالغفور رفیقی اور پروفیسر مس فرحت ہیں۔ جبکہ آئینہ عمرانیات نامی کتاب خالد بک ڈپو اردو بازار نے شائع کی تھی۔ماہرین تعلیم کا کہنا ہے کہ مارکیٹ میں متعدد کتابیں بغیر اجازت کے پرنٹ کی جا رہی ہیں، ٹیکسٹ بک بورڈ بغیر اجازت کتابوں کی پرنٹنگ روکنے میں ناکام ہو چکا ہے۔ماہرین تعلیم کا مزید کہنا ہے کہ کتابوں پر اعتراضات کیلئے اعلان کردہ شکایت سیل بھی قائم نہیں کیا جا رہا۔