ایک پنڈت نے سنجے دت کو انکے پچھلے جنم کے بارے میں کیا بتایا تھا ؟ سینئر اداکار کا حیران کن انکشاف

ممبئی (ویب ڈیسک) بالی ووڈ کے اسٹار اداکار سنجے دت پچھلے جنم میں بادشاہ تھے اور بیوی نے اُن کو زندگی سے محروم کرنے کی سازش تیار کی جو ناکام رہی۔بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق یہ انکشاف سنجے دت نے ’کافی ود کرن‘ کے پہلے سیزن میں سشمتا سین کے ساتھ بطور مہمان شرکت کے

Almarah Advertisement

دوران کیا تھا۔سنجے دت آج اپنی 63ویں سالگرہ منارہے ہیں، انہوں نے حال ہی میں سرطان جیسے موذی مرض کا علاج کروایا اور آج کل اپنی فلم شمشیرا کی پروموشن میں مصروف ہیں۔دوران انٹرویو انہوں نے بتایا کہ ایک پنڈت نے میرے زندگی کے رازوں اور پچھلے جنم سے متعلق گفتگو کی اور مجھے حیران کردیا۔سنجے دت نے کہا تھا کہ پنڈت نے مجھے بتایا کہ میں پچھلے جنم میں بادشاہ تھا، میری بیوی کا ایک وزیر کے ساتھ افیئر تھا اور اُس نے میری موت کی سازش تیار کی۔ان کا کہنا تھا کہ میری زندگی بہت سیدھی سادی نہیں، میرا ایک دوست کرناٹک کے شہر گنگاوتی میں رہتا ہے، جس نے مجھے چنئی کے قریب شیونری مندر سے متعلق بتایا۔اداکار نے شیونری سے متعلق مزید بتایا کہ ایک چھوٹا سا گاؤں ہے، جہاں آپ اپنے انگوٹھے کا نشان دیتے ہیں تاکہ آپ کی جنم کنڈلی نکالی جائے۔سنجے دت کا کہنا تھا کہ پتے پر درج جنم کنڈلی پڑھنے پر پنڈت نے بتایا کہ تمہارے والد کا نام بلراج دت ہے، جس پر میں نے ناں کہا اور بتایا کہ وہ سنیل دت ہیں۔میں نے پنڈت کے دعوؤں کی تردید کی، لیکن وہ اپنی بات کی سچائی پر اصرار کرتا رہا۔اداکار نے یہ بھی کہا کہ پنڈت نے مجھ سے میری پچھلی زندگی سے متعلق باتیں کیں اور بتایا کہ وہ اشوک فیملی کا ایک بادشاہ تھا اور میری بیوی کا وزیر سے افیئر تھا۔انہوں نے کہا کہ بیوی نے میری موت کی ساز ش تیار کی اور مجھے لڑائی پر بھیج دیا، لیکن میں وہاں بہت سے لوگوں کو مار کر زندہ واپس لوٹ آیا۔سنجے دت نے بتایا کہ پنڈت نے مجھ سے کہا کہ جب مجھے سازش کا پتا چلا تو میں نے بیوی اور وزیر کو زندگی سے محروم کر ڈالا۔