شہباز شریف نے خیبرپختونخوا سے متعلق نیا خواب دیکھ لیا

مانسہرہ(ویب ڈیسک) وزیراعظم شہباز شریف کا کہنا ہےکہ آخری مرتبہ وزیراعلیٰ کے پی سے درخواست کر رہا ہوں کہ آٹا سستا کردو، موقع ملا تو نواز شریف کی قیادت میں خیبرپختونخوا کو پنجاب بناکر چھوڑوں گا۔ مانسہرہ میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم شہباز شریف کا کہنا تھا کہ کے پی حکومت نے

Almarah Advertisement

آٹا سستا کرنے پر جواب نہیں دیا، 24 گھنٹے میں وزیراعلیٰ جواب دیں ، جواب نہیں آیا تو کپڑےبیچ کر سستا آٹا دوں گا، فیصلہ کرنا ہوگا کہ تعمیرکرنے والا نوازشریف ہے یا عمران خان ، نوازشریف کی قیادت میں خون پسینہ بہائیں گے، قوم کی خدمت کریں گے۔ وزیراعظم شہباز شریف کا کہنا تھا کہ مہنگائی ساڑھے 3 سال آسمانوں سے باتیں کرتی رہی، 50 لاکھ گھر دور کی بات، ایک اینٹ نہیں لگائی، ہمیں آپ کی تکلیف کا احساس ہے،8 کروڑ لوگوں کے لیے 2 ہزار روپے ماہانہ کی سبسڈی دی ہے، تعمیر کرنے والا یہ خادم ہے اور تخریب کاری کرنے والا عمران خان ہے، اپنی زندگی لڑا دوں گا، آپ کو خوشحال کر دوں گا، پیٹرول کی قیمتیں مجبوری میں بڑھانا پڑی، وہ شخص خزانہ خالی کرکے چلا گیا، قرضے اتنےہیں شاید نسلیں بھی نہ اتار سکیں۔ ان کا کہنا تھا کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں گزشہ حکومت کےفیصلوں کے باعث بڑھانی پڑیں، عمران نیازی گالی گلوچ کرتا ہے میں اس کا جواب نہیں دیتا ہوں، آج ہزارہ موٹر وے سے گزرا تو ہر دم نواز شریف کو یادکیا۔ وزیراعظم نے ہزارہ کے مسائل کے حل کے لیے ایک ارب روپےکے پیکج کا اعلان کرتے ہوئے ہزارہ الیکٹرک کمپنی کا بھی اعلان کیا۔دوسری طرف مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہےکہ عمران خان گرفتاری کے ڈر سے بنی گالا کے بجائے پشاور میں کیوں بیٹھے ہیں ؟ عمران خان جتنا لانگ مارچ کرلیں حکومت کہیں نہیں جارہی، عوام وزیراعظم شہباز شریف کے ساتھ کھڑے ہیں۔ مانسہرہ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مریم نواز کا کہنا تھا کہ خیبر پختونخوا نے عمران خان کے لانگ مارچ کو “ایبسولیوٹلی ناٹ ” کہہ کر مسترد کردیا ، انقلاب اس لیے ناکام ہوا کہ وہ ہیلی کاپٹر سے نہیں آتا، پیراشوٹ سے لینڈ نہیں کرتا، یوٹرن لےکر بنی گالا نہیں پہنچتا، عمران خان نے نااہلی سے پاکستان کے سینے پر زخم لگائے ، اس کا سارا بیانیہ دو نمبر ہے۔