وزیراعلیٰ پنجاب کا انتخاب درست یا غلط!!!! گورنر پنجاب عمر سرفراز نے وزیراعظم شہباز شریف کو بڑی پیشکش کر دی

لاہور: (دنیا نیوز) گورنرپنجاب عمرسرفراز چیمہ نے کہا ہے کہ وزیراعظم شہباز شریف کو وزیراعلیٰ پنجاب کے انتخاب کے معاملے پر قانونی بحث کی پیشکش کی ہے۔ سوشل میڈیا پر اپنے بیان میں گورنرپنجاب عمر سرفراز چیمہ نے کہا کہ وزیر اعظم اور ان کے بیٹے کو ان کے سیاسی رہنماؤں اور قانونی ٹیم کے ساتھ آئینی بحث کی کھلی پیشکش ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ جب چاہیں “میرے اور میری قانونی ٹیم کے ساتھ ایک لائیو قانونی اور آئینی بحث” کر لیں۔ دوسری جانب وزیر اعظم شہباز شریف نے گورنر پنجاب کو ہٹانے کی ایک اور سمری ایوان صدر بھجوا دی۔ ذرائع کے مطابق گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ کو عہدے سے ہٹانے کے لیے وزیر اعظم کی جانب سے صدر مملکت کو سمری بھیجی تھی، تاہم صدر عارف علوی نے مقررہ دنوں میں اسے مسترد کر دیا تھا۔ اب وزیر اعظم نے ایک اور سمری صدر مملکت کو بھجوا دی ہے، جو ایوان صدر کو موصول ہو گئی ہے، وزیر اعظم ہاؤس کے ذرائع کا کہنا ہے کہ صدر کو وزیر اعظم کی نئی سمری پر 10 دن میں فیصلہ کرنا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ آئین کے مطابق گورنر نہیں ہٹائے گئے تو 10 دن میں وہ خود فارغ ہو جائیں گے، وزیر اعظم ساتھ ہی نئے گورنر کے لیے نام بھی صدر مملکت کو ارسال کریں گے، پنجاب کی گورنر شپ پیپلز پارٹی کو ملنے کا امکان ہے۔