افسوسناک خبر:مشتعل مظاہرین نے معروف فٹبالر میسی کاسرتن سےجدا کردیا

بیونس آئرس(ویب ڈیسک)ارجنٹینا میں مشتعل ہجوم نے عالمی شہرت یافتہ فٹبالر لیونل میسی کا مجمسمہ توڑ کر اس کا سر تن سے جدا کردیا ہے۔تفصیلات کے مطابق بیونس آئرس کی حکومت نے اپنے بیان میں کہا کہ لیونل میسی کے اس مجسمے کو مشتعل ہجوم نے نقصان پہنچایا اور اوپری حصے کو بدن سے جدا کردیا ہے۔بلیک ماربل سے تیار کیے گئے اس مجمسمے کو گزشتہ سال کوپا امریکا کپ فائنل میں شکست پر میسی کی جانب سے ریٹائرمنٹ کے اعلان کے بعد نصب کیا گیا تھا۔

تاہم 29 سالہ فٹبالر نے جلد ہی ریٹائرمنٹ واپس لینے کا اعلان کردیا تھا۔میسی اور ان کے مداحوں کے درمیان کبھی کبھی تعلقات کشیدہ بھی رہے ہیں جہاں ان کے کچھ مداح ان پر الزام عائد کرتے رہے ہیں کہ وہ اپنے ملک کیلئے اس طرح کا کھیل پیش نہیں کر پاتے جس طرح کا وہ اپنے کلب بارسلونا کیلئے کرتے ہیں۔فٹبال کی تاریخ کے کامیاب ترین فٹبالر قرار دیے جانے والے لیونل میسی بارسلونا کیلئے کم و بیش تمام ٹرافیاں اور اعزازات جیتنے کا اعزاز رکھتے ہیں لیکن وہ آج تک اپنے آبائی ملک ارجنٹینا کیلئے کوئی بھی عالمی ٹائٹل نہ جیت سکے اور ورلڈ کپ کے ساتھ ساتھ دو مرتبہ کوپا امریکا کپ کے فائنل میں پہنچنے کے باوجود ٹائٹل نہ جیت سکے۔(ی)