تشددکیس: طیبہ کے تو رنگ ہی بدل گئے ؟حیران کن خبر آگئی

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) کوئی خوف نہ چہرے پرپریشانی کے آثار،سویٹ ہوم میں آکرطیبہ بچوں کے ساتھ گھل مل گئی ہے۔نئے دوست ملے تو پرانے دکھ بھی بھول گئے ہیں ۔سویٹ ہوم کے سربراہ اسے پڑھا لکھا کربیرسٹربناناچاہتےہیں۔

اسلام آباد میں دس سالہ طیبہ پر بدترین تشدد ہوا تھا۔کل تک جن آنکھوں میں آنسو تھے،آج ان میں خوشی کی چمک ہے۔جس چہرے پرتشدد کے نشان تھے،آج اطمینان کا پہرہ ہے۔ طیبہ کے سرپر اب سربراہ سویٹ ہوم کی صورت میں پیارکرنے اورخیال رکھنے والے باپ کا سایہ ہے جسے اس کا مستقبل بھی عزیز ہے۔سویٹ ہوم میں آکرطیبہ کو دوستوں کی صورت میں ایک نئی زندگی مل گئی۔اس نئے گھرمیں طیبہ کو جھاڑو پونچھا نہیں کرنا،بس کھیلنا اور پڑھنا ہے ۔ (یا)