سمندر ذات

میں سمندر ذات، تیرا نہ ڈوبا ہوں کبھی

اپنے اندر ڈوبتا اور تیرتا رہتا ہوں میں