بڑی بریکنگ نیوز: صدارتی انتخاب کی ہیکنگ میں روس ملوث، نومنتخب امریکی صدرڈونلڈٹرمپ کابالآخربڑااعتراف۔۔۔اپنےکام سےالگ ہونےکااعلان کردیا

نیو یارک (نیوزڈیسک) نومنتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے کاروبار سےالگ ہونے کااعلان کیاہےاور کہا ہے کہ2016 کے امریکی صدارتی انتخاب سے متعلق ہیکنگ میں روس ملوث تھا۔روسی صدر پیوٹن اگرمجھے پسند کرتے ہیں تو یہ اثاثہ ہے۔نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پہلی پریس کانفرنس سےخطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں جدید ٹیکنالوجی سے واقف ہوں اس بارے غلطی کا مرتکب نہیں ہوسکتا کہ میری کوئی ویڈیو ریکارڈ کرسکے۔میڈیا پر گردش کرنے والی سب خبریں بے بنیاد اور جعلی ہیں۔انہوں نے کہا ہے کہ ہیلری کلنٹن کے خیالات ڈفر لوگوں جیسے ہیں۔بطور امریکی صدر تمام معاملات بارے میں حساس ہوں۔میں نے روس کے ساتھ کوئی ڈیل کی ہے اور نہ کرنے کا ارادہ ہے یہ سب پراپیگنڈہ ہے۔کاروباری معاملات میرے بیٹے دیکھیں گے ۔جعلی انٹیلی جنس رپورٹس بے بنیاد ہیں۔90دن میں انٹیلی جنس حکام ہیکنگ رپورٹ کے ساتھ میرے پاس واپس آئیں گے۔رپورٹ دفاعی امورکی ہیکنگ سے متعلق ہو گی۔انٹیلی جنس ایجنسیوں نے غلط معلومات پھیلنے دیں جو شرمناک ہے۔انٹیلی جنس حکام سے میری ملاقات کی معلومات لیک کی جا رہی ہیں۔امریکا کوچین ،روس سمیت ہرایک سے ہیکنگ کا سامناہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ صدارت سنبھالتے ہی دیوار بنانے کیلیے میکسیکو سے بات کروں گا۔دیواربنانےکا خرچہ میکسیکو سے ٹیکس یاادائیگی کی صورت میں لیں گے۔انتظار کے بجائے اوباماکیئرکو2017 میں ہی ختم کردیں گے۔میں خوراک،سکیورٹی کو ترجیح دوں گا۔عوام کو بہتر صحت فراہم کروں گا۔واضح رہے نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دسمبر میں ہونے والی پریس کانفرنس کو ملتوی کردیا تھا۔نومنتخب امریکی صدر اپنے بزنس سے الگ ہوگئے ہیں اور تمام معاملات اپنے بیٹوں کو سپرد کردیے ہیں۔ٹرمپ آرگنائزیشن کی سربراہی بھی ان کے بیٹے ہی کریں گے۔(خ.و)